ترکی: عوام نے فیصلہ دے دیا

April 16, 2014 // 0 Comments

اردوان اپنے حریفوں کو معاف کرنے کے موڈ میں دکھائی نہیں دیتے۔ ان کا کہنا ہے کہ کل ان کے بعض حریفوں کو بھاگنا پڑے گا۔ ان کا اشارہ واضح طور پر فتح اللہ گولن کی طرف تھا، جن کے حامیوں نے اردوان کی پارٹی کے لیے مشکلات پیدا کرنے کی کوشش کی ہے۔ فتح اللہ گولن بنیادی طور پر تعلیم کے شعبے سے وابستہ رہے ہیں مگر اب ان کے حامیوں نے سیاست میں بھی قدم رکھ دیا ہے

ترکی: بلدیاتی انتخابات میں اردوان کی واضح فتح

April 16, 2014 // 0 Comments

اپوزیشن جماعتوں اور مشکوک گولن تحریک کی جانب سے جسٹس اینڈ ڈویلپمنٹ پارٹی (AK Party) پر مشترکہ شدید حملوں سے بھر پور انتخابی مہم کے باوجود ترکی کی حکمراں جماعت نے ۳۰ مارچ کو منعقدہ بلدیاتی انتخابات میں بھاری اکژیت سے کامیابی حاصل کی

بھارتی الیکشن اور بنگلہ دیش

April 16, 2014 // 0 Comments

تین اطراف سے بنگلہ دیش کو گھیرے ہوئے بھارت کے لیے بنگلہ دیش پر اپنی مرضی مسلط کرنا آسان ہے۔ یہی سبب ہے کہ بھارت کے عام انتخابات بنگلہ دیش کے لیے بھی غیر معمولی اہمیت کے حامل ہیں۔ ان انتخابات کے بطن سے بنگلہ دیش کے لیے بہت سے منفی اور مثبت اثرات پیدا ہوسکتے ہیں۔

کشمیر کے لیے چھ نکاتی ایجنڈا

April 16, 2014 // 0 Comments

سروے کے مطابق ۹۰ سے ۹۵ فیصد کشمیری آزادی کی دولت چاہتے ہیں۔ ڈاکٹر فائی نے خبردار کیا کہ جو قوم آزادی کے لیے اس قدر تڑپ رہی ہو، اسے زیادہ دن دبا کر نہیں رکھا جاسکتا۔ امریکی صدر براک اوباما کو یاد رکھنا چاہیے کہ انہوں نے ۳۰؍اکتوبر ۲۰۰۸ء کو انتخابی مہم کے دوران کہا تھا کہ ہمیں کشمیر کا مسئلہ حل کرنے میں پاکستان اور بھارت کی مدد کرنی چاہیے۔

مصر میں ’’قانونی‘‘ قتلِ عام

April 16, 2014 // 0 Comments

مصر میں ۵۲۹؍افراد کو سزائے موت سنائے جانے کا معاملہ اس قدر عجیب و غریب تھا کہ لگتا تھا یہ فیصلہ کسی اور زمانے یا کسی اور دنیا سے آیا تھا۔ اِخوان المسلمون کے ارکان کے خلاف مقدمہ درست ڈھنگ سے چلایا بھی نہیں گیا اور سزا سنا دی گئی۔ قاہرہ کی خصوصی عدالت کے جج سعید الگاذر نے جس ڈھنگ سے سزا سنائی اسے محتاط ترین الفاظ میں بھی سفاک ہی کہا جائے گا۔ عالمی برادری کا ردعمل وہی ہے، جو ہونا چاہیے تھا۔ قانون کے تمام تقاضوں کو نظرانداز کیا گیا۔ وکلاے صفائی کو اپنے موکلوں سے ملاقات اور مشاورت کی اجازت نہیں دی گئی۔ بہت سے وکلاے صفائی کو عدالتی حکم پر عدالت کے احاطے سے باہر نکال دیا گیا

قبطی عیسائیوں کا راستہ

April 16, 2014 // 0 Comments

مصر میں اِخوان المسلمون کا ایوانِ اقتدار سے نکالا جانا قبطی عیسائیوں کو اپنے مستقبل کے حوالے سے خاصا خوش آئند دکھائی دیا ہے۔ فیلڈ مارشل عبدالفتاح السیسی کا صدر کے منصب کے لیے امیدوار بننا عام قبطی عیسائیوں اور ان کے پیشواؤں کے لیے سکون کا ذریعہ ثابت ہوا ہے۔ مگر خیر ایسا نہیں ہے کہ وہ بالکل پرسکون ہوکر بیٹھ جائیں۔ ملک کے کئی حصوں میں اب بھی شدت پسند مسلم خاصے متحرک ہیں۔

مشرق وسطیٰ: نظریاتی کشمکش کہاں لے جائے گی؟

April 16, 2014 // 0 Comments

تدبر سے کام لینا ہوگا، کسی حلیف ملک کی ناراضی مول نہیں لی جاسکتی، یہ وقت اختلافات کو ہوا دینے کے بجائے سر جوڑ کر بیٹھنے کا ہے، تاکہ مسلم دنیا کو امن کا گہوارہ بنایا جاسکے۔ شام میں جاری بحران اور ایران امریکا ڈیل کے بعد مشرق وسطیٰ کی صورت حال خاصی پیچیدہ ہو گئی ہے

کیوبا میں عدم استحکام کی امریکی سازش

April 16, 2014 // 0 Comments

ایسوسی ایٹیڈ پریس نے بتایا ہے کہ واشنگٹن نے کیوبا میں عدم استحکام پھیلانے کے لیے ’’کیوبا ٹوئٹر‘‘ تخلیق کیا ہے۔ اس کا بنیادی مقصد صرف یہ ہے کہ کیوبا کی کمیونسٹ حکومت کو زیادہ سے زیادہ مشکلات اور ذلت سے دوچار کیا جائے۔ کیوبا ٹوئٹر بھی دنیا بھر میں حکومتوں کو عدم استحکام سے دوچار کرکے حکمرانوں کی تبدیلی کے امریکی پروگرام کا حصہ ہے۔ جو حکومتیں امریکا کے اشاروں پر نہیں چلتیں، ان سے ایسا ہی سلوک روا رکھا جاتا ہے۔

خون اور آنسو | بیسویں قسط

April 16, 2014 // 0 Comments

بنگالی باغیوں کے ایک گروہ نے ہمارے علاقے پر دھاوا بولا۔ وہ ہمارے گھر تک بھی آئے۔ میرے شوہر، جو ریلوے اسٹیشن پر قلی تھے، اس وقت گھر پر نہیں تھے۔ باغیوں نے جب یہ دیکھا کہ میرے شوہر گھر پر نہیں ہیں تو انہوں نے شدید اشتعال کے عالم میں میرے پیٹ پر لات ماری اور مجھے دھکا دیا۔ اس کے بعد انہوں نے گھر میں موجود ہر کار آمد چیز لوٹ لی

فکرِ مغرب: بعض معاصر مسلم ناقدین کے افکار کاتجزیہ | دوسرا حصہ

April 16, 2014 // 0 Comments

جہاں تک سائنس اور اخلاقی اقدار کے باہمی تعلق کا سوال ہے تو ہم یہ سمجھتے ہیں کہ ایسی چیز جو حقیقتِ مطلقہ کے عرفان کا اہم ذریعہ ہو، اسے لازماً اعلیٰ اخلاقی اقدار کے حصول کا ذریعہ بھی ہونا چاہیے۔ لیکن حادثہ یہ ہوا کہ مغرب میں نشاۃِ ثانیہ کے دور میں جب مذہب اور سائنس میں جدائی واقع ہوئی تو اہل سائنس نے ردعمل میں جہاں مذہب کو سائنس کی راہ میں رکاوٹ خیال کرتے ہوئے رَد کر دیا، وہاں مذہبی اخلاقی اقدار سے بھی کنارہ کشی اختیار کرلی

ٹیکنالوجی کے نئے کردار

April 16, 2014 // 0 Comments

اس دنیا میں روبوٹس کا جنم ایک ایسے آلے کے طور پر ہوا جس کے بارے میں بیسویں صدی کے مصنفین اور فلم سازوں نے غیر معمولی حد تک جاکر سوچا اور لکھا۔ روبوٹس کے بارے میں طرح طرح کے منفی اور مثبت تصورات کو ادبی شاہکاروں اور فلمی فن پاروں کے ذریعے پروان چڑھایا گیا۔۔۔

عالمی سرمایہ دارانہ نظام کی تباہ کاریاں

April 1, 2014 // 0 Comments

آزاد منڈی کی معیشت ہی میں ایسا ہوتا ہے کہ کرپٹ امریکی سپریم کورٹ کی مدد سے چند مالیاتی ادارے حکومت ہی کو خرید لیتے ہیں۔ حکومت حقیقی معنوں میں عوام کی نہیں بلکہ ان کرپٹ اداروں کی نمائندہ ہے۔ حکومت کی آمدنی پیدا کرنے کی صلاحیت اور ٹیکسیشن نظام چند مالیاتی اداروں کے لیے مختص ہوکر رہ گئی ہے

1 2 3 7