Abd Add
 

Articles by Ghias Udin

تیونس : جمہوریت اور فسادات

December 16, 2012 // 0 Comments

تیونس میں جمہوریت کو حقیقی معنوں میں متعارف ہوئے زیادہ وقت نہیں گزرا مگر اس چھوٹے سے ملک کو پھر فسادات نے لپیٹ میں لے رکھا ہے۔ سب چاہتے ہیں کہ جو کچھ عشروں میں بگڑا ہے، وہ لمحوں میں درست ہو جائے۔ ایسے میں بہتری کی توقع کس طور رکھی جاسکتی ہے؟ تیونس میں لوگ معاشی مشکلات سے پریشان ہیں۔ عوامی انقلاب کے برپا ہونے سے بہت کچھ الٹ پلٹ گیا ہے۔ ایسے میں لازم ہے کہ معاملات کو درست کرنے کے لیے کچھ وقت دیا جائے۔ مگر قوم حکومت کو وقت دینے کے لیے تیار نہیں۔ تقریباً دو سال قبل جب عرب دنیا اور شمالی افریقا میں عوامی انقلاب کی لہر اٹھی تو سب سے پہلے تیونس میں زین العابدین بن علی کی [مزید پڑھیے]

ــــہندوستانی مسلمانوں کی مظلومیت۔۔۔ بے سبب نہیں!

December 1, 2012 // 0 Comments

مسٹر این سی استھانا (NC Asthana) سینٹرل ریزرو پولیس فورس، کوبرا (ایک ایلیٹ کمانڈوفورس) کے انسپکٹر جنرل ہیں ۔ ان کی اہلیہ مسز انجلی نرمل پولیس انتظام کاری (Police Administration) میں پی -ایچ -ڈی ڈگری کی حامل ہیں ۔ مسٹر این سی استھانا ا ور مسز انجلی نرمل نے اگست ۲۰۱۲ء کے آخر میں شائع شدہ اپنی مشترکہ تصنیف “India’s Internal Security: The Actual Concerns” میں مختلف بھارتی پالیسیوں ،بشمول انٹیلی جنس ناکامی، دہشت گردانہ حملوں میں ذرائع ابلاغ کا کردار، داخلی سلامتی اور مسلمانوں پر ظلم و ستم اور انتقامی کارروائیوں کا محاکمہ و تجزیہ کیا ہے۔ کنل مجمدار نے مصنفین سے ان میں سے کچھ امور پر بات چیت کی، جو حسبِ ذیل ہے: o کیا ہندوستانی سلامتی ادارے حقیقی خطرات سے صرفِ [مزید پڑھیے]

1 2 3 117