معارف فیچر

۱۔ معارف فیچر ہر ماہ کی یکم اور سولہ تاریخوں کو شائع کیا جاتا ہے۔ اس میں دنیا بھر سے (ہمیں) دستیاب ایسی معلومات کا انتخاب پیش کیا جاتا ہے‘ جو اسلام سے دلچسپی اور ملت اسلامیہ کا درد رکھنے والوں کے غور و فکر کے لیے اہم یا مفید ہوسکتی ہیں۔

۲۔ پیش کیا جانے والا لوازمہ بالعموم بلاتبصرہ شائع کیا جاتا ہے۔ کسی مضمون‘ نقطہء نظر‘ خیال یا معلومات کے انتخاب کی وجہ اس سے ہمارا اتفاق نہیں‘ اس کی اہمیت ہوتی ہے۔ کسی مضمون یا معلومات کی مدلل تردید یا اس سے اختلاف پر مبنی لوازمہ کو بھی جگہ دی جاسکتی ہے۔

۳۔ فیچر کو بہتر بنانے کے لیے مفید معلومات کے حصول یا ان کے ذرائع تک رسائی میں آپ کی مدد کا خیرمقدم کیا جائے گا۔

۴۔ ہمارے فراہم کردہ لوازمے کے مزید‘ لیکن غیرتجارتی ابلاغ کی عام اجازت ہے۔

۵۔ معارف فیچر کی کوئی قیمت مقرر نہیں۔ تاہم عطیات کی ضرورت بھی رہتی ہے اور عطیات قبول بھی کیے جاتے ہیں۔

’’سیاسی اسلام‘‘ کو چیلنج کرنا، بھیانک غلطی!

October 1, 2017 // 0 Comments

اسلام پسندوں کا اقتدار میں آنا پریشان کن رہا ہے، لیکن یہ عملی سیاست میں کار آمد ہوسکتے ہیں، انہیں کسی طرح بھی نظر انداز نہیں کیاجاسکتا۔ ایک دہائی پہلے مشرق وسطیٰ میں اسلامی تحریکیں ایک غیر معمولی طاقت تھیں،جب مشرق وسطیٰ کے آمروں نے عرب بغاوتوں کو دبانے کی کوشش کی اس وقت اخوان المسلمون اور اس کے زیر اثر جماعتوں نے ریاست اور اقتدار کو اپنے قبضے میں کرلیا ایسا لگتا تھا کہ اقتدار،محل،فوجی چھاؤنیوں اور خفیہ پولیس کے ہاتھوں سے نکل کر مسجدوں اور بیلٹ بکس میں تبدیل ہوگیا تھا۔ اس وقت عرب دنیا پریشان کن صورتحال سے گزر رہی ہے، جو اسلام پسند تحریکیں جمہوری رجحان رکھتی تھیں اور جمہوری اسلام کو لے کر آگے آناچاہتی تھیں وہ اب اس جمہوریت [مزید پڑھیے]

1 2 3 82