Abd Add
 

معارف فیچر

۱۔ معارف فیچر ہر ماہ کی یکم اور سولہ تاریخوں کو شائع کیا جاتا ہے۔ اس میں دنیا بھر سے (ہمیں) دستیاب ایسی معلومات کا انتخاب پیش کیا جاتا ہے‘ جو اسلام سے دلچسپی اور ملت اسلامیہ کا درد رکھنے والوں کے غور و فکر کے لیے اہم یا مفید ہوسکتی ہیں۔

۲۔ پیش کیا جانے والا لوازمہ بالعموم بلاتبصرہ شائع کیا جاتا ہے۔ کسی مضمون‘ نقطہء نظر‘ خیال یا معلومات کے انتخاب کی وجہ اس سے ہمارا اتفاق نہیں‘ اس کی اہمیت ہوتی ہے۔ کسی مضمون یا معلومات کی مدلل تردید یا اس سے اختلاف پر مبنی لوازمہ کو بھی جگہ دی جاسکتی ہے۔

۳۔ فیچر کو بہتر بنانے کے لیے مفید معلومات کے حصول یا ان کے ذرائع تک رسائی میں آپ کی مدد کا خیرمقدم کیا جائے گا۔

۴۔ ہمارے فراہم کردہ لوازمے کے مزید‘ لیکن غیرتجارتی ابلاغ کی عام اجازت ہے۔

۵۔ معارف فیچر کی کوئی قیمت مقرر نہیں۔ تاہم عطیات کی ضرورت بھی رہتی ہے اور عطیات قبول بھی کیے جاتے ہیں۔

سعودی عرب: روشن خیالی کی راہ پر۔۔۔!

July 16, 2018 // 0 Comments

الہامی تعلیمات کو کیونکر تبدیل کیا جائے،یا ان قوانین کی تبدیلی کیسے ممکن ہے،جن کوخدائی تعلیمات سمجھا جاتا ہے۔یہ وہ سوالات ہیں جس کا شاہ محمد سلمان کواس وقت سامنا ہے۔ انھوں نے اصلاحات کے نام پربعض سماجی پابندیوں پرنرمی کا اعلان کیاہے۔شاہ سلمان ہر ’’برائی‘‘ اور ’’شر‘‘ کا ذمہ دار ایران کو قرار دیتے ہیں۔ ان کا کہناہے۱۹۷۹ء میں ہمارا فیصلہ غلط تھا۔ یاد رہے یہی وہ سال ہے جب شیعہ اسلام پسندوں نے شاہ ایران کا تختہ الٹ دیاتھا اور سنی اسلام پسندوں نے سعودی عرب میں بادشاہت کے خلاف بغاوت کرتے ہوئے مسجد حرام پر قبضہ کر لیاتھا۔ اسی سال سوویت یونین کی افواج افغانستان میں داخل ہو گئی تھیں۔شاہ سلمان کے ان حالیہ اقدامات سے امید ہے سعودی عوام جلد محفل [مزید پڑھیے]