Abd Add
 

شمارہ 16 جون 2018

پندرہ روزہ معارف فیچر کراچی
جلد نمبر:11، شمارہ نمبر:12

اسرائیل کے ستّر سال

June 16, 2018 // 0 Comments

اسرائیل میں حالیہ دنوں میں خوشیوں کے شادیانے بجائے جارہے ہیں اسرائیل کے قیام کے ستر سال مکمل ہورہے ہیں، وہ اپنی برقرار رہنے والی معاشی ترقی، جدید ٹیکنالوجی کی برآمدات میں اضافہ کے ساتھ ساتھ دنیا بھر کے تحقیق کاروں کی اسرائیلی سرزمین پر تحقیق کرنے کی خواہش پر بھی خوشیاں منا رہے ہیں،ایک غیر مستحکم خطے میں جہاں خانہ جنگی عروج پر ہے وہاں اسرائیل میں راوی چین ہی چین لکھتا ہے۔ اسرائیل کے ارد گرد موجود مشرق وسطیٰ کے دیگر ممالک افرا تفری اور طاقت کے کھیل میں مصروف ہیں۔ سعودی عرب اور مصر نے ایران اورداعش کے خلاف ایک اتحاد تشکیل دیا ہے، دنیا بھر کے چوٹی کے رہنما اسرائیل کا دورہ کررہے ہیں اور نیتن یاہو انہیں اسرائیل کے دارالحکومت [مزید پڑھیے]

حماس کی نئی قیادت: یحییٰ سِنوار

June 16, 2018 // 0 Comments

یحییٰ سِنوار شاید اس وقت فلسطین کی سب سے با اثر شخصیت ہیں۔انھوں نے اپنی ۵۶ سالہ زندگی کا بڑاحصہ جیل میں گزارا، چاہے وہ اسرائیلی جیل ہو یا غزہ جیسی کھلی جیل۔ اسرائیل کی جانب سے غزہ اور اسرائیل کی سرحد پر ۶۰ فلسطینی مظاہرین کو ہلاک کیے جانے کے دو روز بعد ۱۶ مئی کو غزہ کے باسی یہ جاننے کے لیے ٹیلی ویژن کے گرد جمع تھے کہ کیا اشتعال اور تشدد کی نئی لہر انھیں ایک اور جنگ کی طرف دھکیل دے گی؟وہ نہ تو فلسطینی صدر محمود عباس کو سن رہے تھے اور نہ ہی حماس کے رہنما اسماعیل ہانیہ کو، بلکہ وہ غزہ میں حماس کے رہنما یحییٰ سنوار کو سن رہے تھے جو آنے والے وقت میں پورے [مزید پڑھیے]

’’انڈو پیسفک ریجن‘‘مودی کی ترجیحات

June 16, 2018 // 0 Comments

آج سے چار برس قبل جب مودی نے اقتدار سنبھالا تو خطے کے حوالے سے جاری معاشی تعلقات پر منحصر خارجہ پالیسی کو تبدیل کر کے سیاسی اور سکیورٹی کے حوالے تعلقات کو مستحکم کرنے پر زور دیا۔لیکن تیزی سے تبدیل ہوتے اور تزویراتی طور پر نہایت ہی اہم خطے ’’انڈو پیسفک‘‘ سے متعلق ان کی منصوبہ بندی یا اس حوالے سے ان کا نقطہ نظر جاننابھی اہم ہے۔ مودی کے دورِ اقتدار میں بھارت کی معاشی ترقی اوسطاً ۳ء۷ فیصد رہی۔۲۰۱۶ء سے ۲۰۱۸ء تک بھارت دنیابھر میں تیزی سے ترقی کرتی ہوئی معیشت والے ممالک میں شامل رہا ہے۔ ۲۰۱۸ء اور ۲۰۱۹ء میں معاشی ترقی ۴ء ۷ فیصد تک ہونے کا امکان ہے، جبکہ ۲۰۱۹ء سے ۲۰۲۰ء تک یہ ۸ء۷ فیصد تک ہوگی اور [مزید پڑھیے]