شمارہ 16 مارچ 2012

پندرہ روزہ معارف فیچر۔۔
جلد نمبر:5، شمارہ نمبر:6

سعودی عرب: بے فکری کے دن ختم ہوئے!

March 16, 2012 // 0 Comments

سعودی عرب میں ایک طرف بیروزگاری بڑھ رہی ہے اور دوسری طرف سیاسی کشیدگی میں اضافہ ہو رہا ہے۔ یہ صورت حال ملک کی معیشت پر بھی بری طرح اثر انداز ہو رہی ہے۔ معاشرتی اور سیاسی تبدیلیاں حکومت پر اصلاحات کے لیے دباؤ بڑھا رہی ہیں۔

عرب بَہار اور اخوان المسلمون

March 16, 2012 // 0 Comments

اخوان انقلاب کے بجائے ارتقاء پر یقین رکھتی ہے یعنی ہر تبدیلی کو مرحلہ وار آنا چاہیے۔ اخوان اور اس کے ہم خیال گروپوں کو اسلامی معاشروں کی شناخت درست کرنے اور اقدار کو مستحکم کرنے سے زیادہ دلچسپی ہے۔ وہ اللہ کا نظام ہر حال میں اور ہر قیمت پر نافذ کرنے کے معاملے میں عجلت پسندی کا شکار ہیں نہ جذباتیت کا۔

ترکی میں غداری

March 16, 2012 // 0 Comments

ترکی اور روس میں جب بھی کوئی صحافی حکومت پر تنقید کرنے کی ہمت اپنے اندر پیدا کرتا اور ایسا کر گزرتا ہے تو جلد یا بدیر اپنے آپ کو جیل کی سلاخوں کے پیچھے پاتا ہے۔ روس کی طرح ترکی میں بھی حکومت کے مخالفین کو قید و بند کی صعوبتوں کا سامنا کرنا پڑتا ہے اور وہ بھی بسا اوقات مقدمات کا سامنا کیے بغیر

جنگی مقدمات اور گرفتاریاں اسلامی لہر کو روکنے کے لیے ہیں!

March 16, 2012 // 0 Comments

بنگلہ دیش کے معروف نشریاتی ادارے ’’اے ٹی این نیوز‘‘ نے سابق امیر، بنگلہ دیش جماعت اسلامی، پروفیسر غلام اعظم کا تفصیلی انٹرویو ۱۲؍دسمبر ۲۰۱۱ء کو پیش کیا۔ گرفتاری سے قبل ’’اے ٹی این نیوز‘‘ نے انٹرویو کو بنگلہ اور انگریزی زبان میں اپنی ویب سائٹ میں شامل کیا۔ جسے مسئلہ کی پیچیدہ نوعیت اور بیگم حسینہ واجد حکومت کے ارادوں سے آگاہی کے لیے قارئینِ ’’معارف فیچر‘‘ کی خدمت میں پیش کیا جارہا ہے۔

بحیرۂ جنوبی چین کا تنازع

March 16, 2012 // 0 Comments

پہلی جنگ عظیم میں جرمنی میدان جنگ بنا تھا۔ کئی ممالک کی افواج نے جرمن سرزمین پر اپنا ہنر آزمایا اور پھر یہ لڑائی کئی ملکوں پر پھیلی۔ یہی حال بحیرہ جنوبی چین کا بھی ہے۔ اس خطے میں کئی ممالک کے مفادات ایک دوسرے سے متصادم ہو رہے ہیں۔ سمندری حدود کے تنازعے سے لے کر سمندر کی تہہ میں موجود تیل اور گیس کے ذخائر پر ملکیت کے دعوے تک کئی ممالک بظاہر جنگ لڑنے تک پہنچ چکے ہیں۔