Abd Add
 

معارف فیچر

۱۔ معارف فیچر ہر ماہ کی یکم اور سولہ تاریخوں کو شائع کیا جاتا ہے۔ اس میں دنیا بھر سے (ہمیں) دستیاب ایسی معلومات کا انتخاب پیش کیا جاتا ہے‘ جو اسلام سے دلچسپی اور ملت اسلامیہ کا درد رکھنے والوں کے غور و فکر کے لیے اہم یا مفید ہوسکتی ہیں۔

۲۔ پیش کیا جانے والا لوازمہ بالعموم بلاتبصرہ شائع کیا جاتا ہے۔ کسی مضمون‘ نقطہء نظر‘ خیال یا معلومات کے انتخاب کی وجہ اس سے ہمارا اتفاق نہیں‘ اس کی اہمیت ہوتی ہے۔ کسی مضمون یا معلومات کی مدلل تردید یا اس سے اختلاف پر مبنی لوازمہ کو بھی جگہ دی جاسکتی ہے۔

۳۔ فیچر کو بہتر بنانے کے لیے مفید معلومات کے حصول یا ان کے ذرائع تک رسائی میں آپ کی مدد کا خیرمقدم کیا جائے گا۔

۴۔ ہمارے فراہم کردہ لوازمے کے مزید‘ لیکن غیرتجارتی ابلاغ کی عام اجازت ہے۔

۵۔ معارف فیچر کی کوئی قیمت مقرر نہیں۔ تاہم عطیات کی ضرورت بھی رہتی ہے اور عطیات قبول بھی کیے جاتے ہیں۔

امریکا اور اسرائیل حالات کو بد سے بدتر بنا رہے ہیں!

October 16, 2004 // 0 Comments

توقع کے عین مطابق ہر گزرے دن کے ساتھ عالمی اسٹیج پر ہونے والے ڈرامائی واقعات کی رفتار تیز ہوتی جارہی ہے اور لگتا ہے کہ امریکا کے صدارتی انتخابات سے قبل اگلے تین ہفتوں میں اس پردۂ زنگاری سے بہت کچھ نمودار ہونے والا ہے۔ ہو سکتا ہے اسامہ بن لادن پکڑ لیے جائیں تاکہ بش کی گرتی ہوئی ساکھ کو سہارا ملے یا اسرائیل ایران پر حملہ کر دے لیکن اس وقت جو کچھ ہو رہا ہے اس سے تو بش کے لیے حالات بد سے بدتر ہوتے دکھائی دے رہے ہیں۔ ایک طرف امریکی خفیہ ایجنسی سی آئی اے کی تازہ رپورٹ نے جارج بش اور ان کے حواریوں کو پوری دنیا کے سامنے ان کے اصل مکروہ حیثیت کو برہنہ کر [مزید پڑھیے]

انتہائی درست وقت بتانے والی ننھی ایٹمی گھڑی

October 16, 2004 // 0 Comments

امریکا محکمہ تجارت کے قومی ادارہ براے معیارات و ٹیکنالوجی (NIST) میں سائنسدان ایک نئے نمونے کی ایٹمی گھڑی کا مظاہرہ کر رہے ہیں جسے محفوظ لاسلکی مواصلات اور زیادہ درست جہاز رانی کے مقاصد کے لیے چھوٹے اور بیٹری سے چلنے والی آلات میں درست وقت کا حساب رکھنے کے لیے استعمال کیا جاسکے گا۔ یہ بات NIST کی ایک پریس ریلیز میں بتائی گئی ہے۔ چِپ کے حجم کی اس گھڑی کے متعلق مزید معلومات کے لیے ویب سائٹ http://www.boulder.nist.gov/timefreq/ofm/smallclock/ ملاحطہ کیجیے۔ پریس ریلیز کا متن درج ذیل ہے: اس ایٹمی گھڑی کا قلب کسی بھی ایٹمی گھڑی سے تقریباً ۱۰۰ گنا کم بتایا جاتا ہے۔ امریکی محکمہ تجارت کے قومی ادارہ براے معیارات و ٹیکنالوجی میں سائنسدانوں نے اس ایٹمی گھڑی کا [مزید پڑھیے]

اہرامِ مصر: انسانی تاریخ کا سات ہزار سالہ معمّہ

October 16, 2004 // 0 Comments

اہرام دنیاے قدیم کی اعلیٰ سائنسی ترقی کے ٹھوس اور جیتے جاگتے ثبوت ہیں۔ اہرام کا عملِ پیمائش گویا پتھروں کی زبان میں الہام بیانی ہے۔ اہرام کی ساخت و تعمیر سے اندازہ ہوتا ہے کہ اس کام میں کسی اور ہی دنیا کی مخلوق کا تعاون حاصل رہا ہے۔ اہرام کے سربستہ رازوں کا انکشاف جدید سائنس کا شیرازہ بکھیر سکتا ہے۔ یہ ہیں وہ چند در چند نظریات جو اہرامِ مصر کے معانی‘ اصلیت اور تاریخ کے بارے میں پیش کیے جاتے ہیں۔ ان عظیم مقبروں کی اہمیت پچھلے ایک ہزار برسوں سے دنیا بھر کے سائنسدانوں‘ علما‘ صوفیا اور عام لوگوں کے درمیان موضوعِ بحث رہی ہے۔ ان کے مباحثے کا زیادہ تر محور و مرکز مصر کا سب سے بڑا اہرام [مزید پڑھیے]

سرد جنگ کے دور کی ٹیکنالوجی سے زلزلوں کا جائزہ

October 16, 2004 // 0 Comments

ارضیاتی سائنسدانوں کی ایک ٹیم‘ سرد جنگ کے دوران فوج کی تیار کردہ حساس ٹیکنالوجی کے استعمال سے کیلیفورنیا میں سان اینڈریاس (San Andreas) کے علاقے میں ارضیاتی رخنوں پر اپنی نوعیت کا پہلا تجربہ کر رہے ہیں۔ یہ بات ہوسٹن‘ ٹیکساس میں رائس یونیورسٹی سے جاری ہونے والی ایک پریس ریلیز میں بتائی گئی ہے۔ محققین ایسے اعداد و شمار جمع کریں گے جن سے انہیں سطح زمین سے دو سے تین کلو میٹر نیچے بجری کے سائز کے پتھروں پر مشتمل ارضیاتی نقص کے علاقے کی واضح تصویر حاصل ہو سکے گی۔ چٹانوں کے یہ ٹکڑے‘ براعظمی طبقوں کے آپس میں رگڑ کھانے سے بنتے ہیں۔ رائس یونیورسٹی میں ارضیاتی طبیعات کے پروفیسر مانک تلوانی کا کہنا ہے ’’اگر یہ ٹیکنالوجی قابلِ عمل [مزید پڑھیے]

1 157 158 159