Abd Add
 

معارف فیچر

۱۔ معارف فیچر ہر ماہ کی یکم اور سولہ تاریخوں کو شائع کیا جاتا ہے۔ اس میں دنیا بھر سے (ہمیں) دستیاب ایسی معلومات کا انتخاب پیش کیا جاتا ہے‘ جو اسلام سے دلچسپی اور ملت اسلامیہ کا درد رکھنے والوں کے غور و فکر کے لیے اہم یا مفید ہوسکتی ہیں۔

۲۔ پیش کیا جانے والا لوازمہ بالعموم بلاتبصرہ شائع کیا جاتا ہے۔ کسی مضمون‘ نقطہء نظر‘ خیال یا معلومات کے انتخاب کی وجہ اس سے ہمارا اتفاق نہیں‘ اس کی اہمیت ہوتی ہے۔ کسی مضمون یا معلومات کی مدلل تردید یا اس سے اختلاف پر مبنی لوازمہ کو بھی جگہ دی جاسکتی ہے۔

۳۔ فیچر کو بہتر بنانے کے لیے مفید معلومات کے حصول یا ان کے ذرائع تک رسائی میں آپ کی مدد کا خیرمقدم کیا جائے گا۔

۴۔ ہمارے فراہم کردہ لوازمے کے مزید‘ لیکن غیرتجارتی ابلاغ کی عام اجازت ہے۔

۵۔ معارف فیچر کی کوئی قیمت مقرر نہیں۔ تاہم عطیات کی ضرورت بھی رہتی ہے اور عطیات قبول بھی کیے جاتے ہیں۔

فضائی گیس اسٹیشن

February 16, 2014 // 0 Comments

امریکی اسٹریٹو ٹینکرجہاز، جو فضا میں لڑاکا طیاروں کو ایندھن فراہم کرتا ہے، نے بلندیوں پر سفر کرتے ہوئے ریڈیو نشریات منقطع کردیں تو افغانستان کی پاکستان سے ملحقہ سرحد پر خاموشی چھا جاتی ہے لیکن نیٹو کی فضائی ٹریفک ایک مختلف کہانی سناتی ہے

مولانا ابوالکلام محمد یوسف۔ حیات و خدمات

February 16, 2014 // 0 Comments

معروف اسلامی اسکالر، مصنف، سول سوسائٹی کے رہنما، سابق وزیر، ممبر قومی اسمبلی اور بنگلہ دیش جماعت اسلامی کے نائب امیر مولانا ابوالکلام محمد یوسف اتوار ۹ فروری ۲۰۱۴ء کو بنگلہ بندھو شیخ مجیب میڈیکل یونیورسٹی اسپتال میں دورانِ علاج اپنے خالق حقیقی سے جاملے۔

ڈاکٹر یاسین مظہر صدیقی کے خطباتِ سیرت

February 16, 2014 // 3 Comments

ادارہ تحقیقاتِ اسلامی نے اقبال بین الاقوامی ادارہ برائے تحقیق و مکالمہ کے اشتراک سے ۲۵ تا ۲۹ مارچ ۲۰۱۳ء کو خطباتِ سیرت کا اہتمام کیا۔ اس پروگرام کے سلسلے میں برصغیر پاک و ہند کے معروف سیرت نگار پروفیسر ڈاکٹر محمد یاسین مظہر صدیقی نے سیرت نگاری کے موضوع پر پانچ خطبات دیے۔ ذیل میں ان خطبات کا خلاصہ پیش کیا جارہا ہے:

جعلی ریفرنڈم پر اخوان المسلمون کا موقف

February 1, 2014 // 0 Comments

مصر میں اقتدار پر قابض فوج نے اپنے معاملات کو جائز قرار دلانے کے لیے جو ریفرنڈم کرایا ہے، اس کے طریقِ کار اور نتائج پر دنیا نے انگلیاں اٹھائی ہیں۔ کئی صوبوں میں ووٹوں کی گنتی کی گئی تو ڈالے جانے والے ووٹوں کی تعداد صوبے کی آبادی سے بھی زیادہ نکلی! عالمی برادری اور غیر جانب دار مبصرین نے ریفرنڈم کو آنکھوں میں دھول جھونکنے کی کوشش قرار دیا ہے

1 65 66 67 68 69 101