Abd Add
 

رپورٹ

بنگلادیش: جمہوری اشاریے کی پست ترین سطح پر!

March 1, 2018 // 0 Comments

اکنامسٹ انٹیلی جنس یونٹ کی حالیہ رپورٹ کے مطابق آزادی اظہار رائے پر پابندی، انسانی اور جمہوری حقوق پر قدغن اور ان معیارات کی تنزلی کی وجہ سے بنگلادیش عالمی جمہوری اشاریہ بندی میں گزشتہ دس سال کے پست ترین درجے میں موجود ہے۔ حالیہ درجہ بندی میں ۱۶۷؍ممالک میں بنگلادیش کا نمبر۹۲ ہے۔ جبکہ گزشتہ سال ۸۴ تھا۔ EIU کے مطابق دنیا کی آبادی کے صرف ۵ فیصد انسانوں کو مکمل جمہوری حقوق حاصل ہیں۔ رپورٹ میں صرف ۸ ویں درجے سے اوپر ممالک کو مکمل جمہوری نظام کا حامل قرار دیا گیا ہے۔ رپورٹ میں کہا گیا ہے کہ گزشتہ سال امریکی ووٹروں کے اپنی حکومت، منتخب نمائندوں اور سیاسی جماعتوں پر عدم اعتماد کے باعث، امریکا مکمل جمہوری آزادی کے حامل ملک [مزید پڑھیے]

ایشیا ’’ارب پتی‘‘ افراد میں سب سے آگے

March 16, 2013 // 0 Comments

دنیا بھر میں سب سے زیادہ ارب پتی اس وقت چین میں ہیں۔ یہ بات دولت مند افراد کے بارے میں شائع ہونے والے ایک چینی جریدے نے بتائی ہے۔ ’’ہورون رپورٹ‘‘ نے بتایا ہے کہ کسی بھی براعظم کے مقابلے میں زیادہ ارب پتی چین میں ہیں۔ ایسا پہلی بار ہوا ہے کہ شمالی امریکا سے زیادہ ارب پتی کہیں اور پائے گئے ہوں۔ ’’ہورون رپورٹ‘‘ کے مطابق جنوری ۲۰۱۳ء تک دنیا بھر میں ایک ارب ڈالر یا اس سے زائد کی ذاتی املاک رکھنے والے افراد کی تعداد ۱۴۵۳ ہے۔ جریدے کے مطابق ایشیا میں ۶۰۴ ؍ ارب پتی، شمالی امریکا میں ۴۴۰؍ اور یورپ میں ۳۲۴؍ ارب پتی ہیں۔ یہ پہلا موقع ہے کہ سب سے زیادہ ارب پتی ایشیا میں پائے [مزید پڑھیے]

عقیدۂ توحید و رسالت، مسلم اُمت کی مستحکم بنیاد ہے!

October 16, 2012 // 0 Comments

پیو ریسرچ سینٹر کے تازہ مطالعے کے مطابق دنیا میں اس وقت ایک ارب ساٹھ کروڑ مسلمان ہیں، جو کرۂ ارض کے مختلف خطوں میں پھیلے ہوئے ہیں۔ اور ان کی بہت بڑی اکثریت (۸۵ سے ۱۰۰ فیصد) اسلام کے بنیادی عقائد پر متحد و متفق ہے۔ توحید، رسالتِ محمدیؐ، رمضان کے روزے۔ البتہ دیگر امور میں اسلامی احکام کی تعبیر و تشریح میں اختلافات پائے جاتے ہیں۔ سینٹر نے تمام براعظموں کے ۳۹ ملکوں میں اس مطالعے کا کام ۲۰۰۸ء میں شروع کیا تھا، جس کی رپورٹ، اگست کے دوسرے ہفتے میں جاری کی گئی۔ (ایشین ایج ۱۰؍ اگست) اس رپورٹ میں عالمی مسلم آبادی کے ۶۷ فیصد حصے کا احاطہ کیا گیا۔ مختلف ممالک کے ۳۸ ہزار افراد سے ۸۰ زبانوں میں سوالات [مزید پڑھیے]

’’بائبل: ابتداء سے انتہا تک‘‘

January 16, 2006 // 0 Comments

مذاہب ہر دور اور ہر قوم کے لوگوں میں دلچسپی کا موضوع رہا ہے۔ تاہم آج جب تقابل ادیان کی ہر طرف بات کی جارہی تو اس کی اہمیت بہت بڑھ گئی ہے۔ مذہب سے آگاہی اور اس کے پس منظر و پیش منظر سے واقفیت حاصل کرنا تحریر و تحقیق سے دلچسپی رکھنے والے طالب علموں کے لیے اہمیت کا حامل رہاہے۔ کیونکہ دین نے جب بھی مذہب کی شکل اختیار کی تو انسان بنیاد سے ہٹ گیا اور اختلافات و تنازعات کو جنم دیا۔ ان ہی خیالات کے پیش نظر سہیل جمیل نے بائبل پر تحقیق کا آغاز کیا اور بالآخر اپنی کوششوں کے بعد اسے تکمیل تک پہنچایا۔ اپنی اس تحقیق کو انہوں نے ’’بائبل: ابتداء سے انتہا تک‘‘ کے نام سے [مزید پڑھیے]

خیبر بینک کی اسلام کاری

June 1, 2005 // 0 Comments

مورخہ ۲۴ مئی ۲۰۰۵ء کو ’’اسلامک ریسرچ اکیڈمی، کراچی‘‘ کے زیر اہتمام بینک آف خیبر میں اسلام کاری کے عنوان پر اکیڈمی کے نوتعمیر شدہ لیکچر ہال میں ایک پریزینٹیشن کا انعقاد کیا گیا‘ جس کی صدارت سینیٹر پروفیسر عبدالغفور احمد نے کی۔ بینک آف خیبر میں اسلامی بینکنگ آپریشن کے ہیڈ اور بینک کے نائب صدر اسد علی اور بورڈ آف ڈائریکٹرز کے ممبر پروفیسر سید محمد عباس نے غیرسودی کارگزاریوں پر تفصیل سے روشنی ڈالی۔ خیبر بینک کی شرعیہ سپروائزری کمیٹی کا تعارف کراتے ہوئے پروفیسر سید محمد عباس نے کہا کہ ممتاز ماہرِ معاشیات سینیٹر پروفیسر خورشید احمد اس کے چیئرمین ہیں جبکہ جسٹس (ر) مفتی تقی عثمانی‘ پروفیسر ڈاکٹر محمود احمد غازی‘ مفتی غلام الرحمن‘ ڈاکٹر شاہد حسن صدیقی اور ڈاکٹر [مزید پڑھیے]

تفہیمِ حدیث سرٹیفکیٹ کورس

May 16, 2005 // 0 Comments

اسلامک ریسرچ اکیڈمی‘ کراچی کے تحت ۲۵ فروری تا ۱۳ مئی ۲۰۰۵ء ہر جمعہ بعد نمازِ مغرب ’’تفہیمِ حدیث سرٹیفکیٹ کورس‘‘ کا اہتمام کیا گیا۔ کورس میں تقریباً ۷۰ خواتین و حضرات شریک رہے۔ حضرت مولانا فقیر حسین حجازی (شیخ الحدیث جامعہ حنیفیہ و ڈائریکٹر قرآن فائونڈیشن) نے علومِ حدیث کے مختلف پہلوئوں کا احاطہ کرتے ہوئے طلبہ کو اس کے مبادیات اور باریکیوں سے اچھی طرح روشناس کرایا۔ فاضل استاد نے اپنے لیکچرز میں تعارفِ حدیث‘ حجیتِ حدیث‘ علوم الحدیث‘ اصطلاحاتِ حدیث‘ کتابت و تدوینِ حدیث‘ فتنۂ وضع حدیث‘ فتنۂ انکارِ حدیث‘ مستشرقین اور حدیث‘ طبقات المحدثین اور کتبِ حدیث جیسے اہم موضوعات کا احاطہ کیا۔ دورانِ لیکچرز سامعین کی جانب سے اس موضوع سے متعلق کئی سوالات اٹھائے گئے‘ فاضل استاد نے تشفی [مزید پڑھیے]

خواتین کی مظلومیت اور جدید دنیا

May 1, 2005 // 0 Comments

خواتین اور گھریلو تشدد (Domestic Violence Against Married Women) یہ وہ مسئلہ ہے جو آج دنیا بھر میں اٹھا ہوا ہے یا اٹھایا جارہا ہے۔ اسلامک ریسرچ اکیڈمی‘ کراچی نے اس موضوع پر پاکستان کے ۸ بڑے شہروں میں ایک سائنسی سروے کا اہتمام کیا۔ یہ سروے بین الاقوامی معیار کے پروفیشنل ادارے “NIPO” کے ذریعہ مکمل ہوا جو کہ خواتین فیلڈ ورکرز کے ذریعہ کرایا گیا ہے۔ اس لحاظ سے یہ تازہ ترین ہے کہ فروری ۲۰۰۵ء میں اس کا فیلڈ ورک مکمل ہوا ہے اور مارچ کے پہلے ہفتہ میں اس کی رپورٹ اسلامک ریسرچ اکیڈمی‘ کراچی کے شعبۂ ریسرچ کو موصول ہوئی ہے۔ آپ کے استفادے اور معلومات کے لیے اس جائزہ کا خلاصہ نکات کی شکل میں حاضرِ خدمت ہے۔ یہ [مزید پڑھیے]

اسلام سے متعلق امریکیوں کی سوچ میں استحکام

October 16, 2004 // 0 Comments

امریکا کی عراق میں جنگ اور اندرونِ خانہ دہشت گردی کے مسلسل خطرے کے باوجود گذشتہ سال سے موازنہ کی صورت میں یہ واضح ہوتا ہے کہ اسلام کے تئیں عوام کے رویے میں استحکام آیا ہے۔ ایک سرسری جائزے کے مطابق دس امریکیوں میں چار امریکی (%۳۹) کا کہنا ہے کہ وہ اسلام کو پسندیدگی کی نگاہ سے دیکھتے ہیں جبکہ ۳۷ فیصد امریکیوں کی اسلام کے بارے میں رائے اچھی نہیں ہے۔ اسلام کے بارے میں عوامی رائے تبدیل نہیں ہوئی ہے جیسا کہ ۲۰۰۳ء کے جائزے میں ۴۰ فیصد لوگوں کی رائے اسلام کے حق میں اچھی اور پسندیدہ تھی۔ امریکیوں کا کثیر طبقہ (%۴۶) اس خیال کا حامل ہے کہ اسلام دوسرے مذاہب کے مقابلے میں زیادہ تشدد کی جانب مائل [مزید پڑھیے]