Abd Add
 

بش انتظامیہ

میں ’’عالمی یک طرفہ پن‘‘ کا حامی نہیں ہوں!

April 16, 2005 // 0 Comments

گذشتہ ہفتے عالمی بینک کے سربراہ کے لیے اپنی نامزدگی کے ساتھ ہی Paul Wolfowitz (امریکی نائب وزیرِ دفاع) نے بیرونی تشویش و عدم اعتماد کو اپنے واضح بیان کے ذریعہ دور کرنے کی کوشش کی۔ نیوز ویک کے نمائندے لیلی ویمائوتھ کے ساتھ اپنے انٹرویو میں انہوں نے امکانات سے بھرپور اپنی نئی ذمہ داری کے سلسلے میں اظہارِ خیال کیا۔ اس کے ساتھ ہی انہوں نے امریکا کی عراق پالیسی تشکیل دینے کے حوالے سے اپنے ماضی اور حال کے کردار پر بھی روشنی ڈالی۔ انٹرویو کا اقتباس درج ذیل ہے: س: عالمی بینک کے ایک اچھے سربراہ ثابت ہونے سے متعلق آپ یورپی ممالک کو کس طرح مطمئن کریں گے؟ ج: میں یورپی ممالک کو یہ بتائوں گا کہ میں کیوں ایک [مزید پڑھیے]

جارج واکر بش کو منہ چڑھاتی گیارہ کتابیں

March 1, 2005 // 0 Comments

ا سے زیادہ حیرت انگیز بات اور کیا ہو سکتی ہے کہ ایک ایسا شخص جس کی علمی دنیا مخالف ہو اور پھر وہ اس مخالفت کی فضا میں دوبارہ صدرِ امریکا منتخب ہو جائے۔ جارج واکر بش کی اس عجیب و غریب صورتحال سے متاثر ہو کر ٹائم میگزین نے انہیں سالِ رفتہ کی شخصیت قرار دیا۔ ایک تجزیہ کے مطابق ۲۰۰۴ء میں صدارتی انتخاب سے قبل تک امریکا میں بش کے خلاف گیارہ ایسی کتابیں منظرِ عام پر آئیں جنہیں بین الاقوامی طور پر شہرت ملی اور وہ سب سے زیادہ فروخت ہونے والی کتابوں میں شمار کی گئیں۔ ان میں سے ایک کتاب باب وڈ ورڈ کی “Plan of Attack” ہے۔ اسے سائمن اور سوشٹر نے شائع کیا ہے۔ ۴۸۰ صفحات کی [مزید پڑھیے]

1 2