Abd Add
 

شامی حکومت

شام کے بحران سے اسرائیل فائدہ اٹھائے گا!

October 1, 2012 // 0 Comments

لبنان کے دروز لیڈر ولید جنبلاط (Walid Jumblatt) کا شمار ان با اثر سیاست دانوں میں ہوتا ہے جن کے بیانات بحث کا موضوع بنتے ہیں۔ انہوں نے ۱۹۸۰ء کے عشرے میں لبنانی سیاست میں اہم کردار ادا کیا تھا۔ ولید جنبلاط نے خبردار کیا ہے کہ شام کی صورت حال لبنان پر اچھی خاصی اثر انداز ہوسکتی ہے۔ انہوں نے لبنان کے علاقے ٹریپولی کے واقعات کو بھی شام کی صورت حال کا شاخسانہ قرار دیا ہے۔ پروگریسیو سوشلسٹ پارٹی کے سربراہ ولید جنبلاط کا کہنا ہے کہ شام کی تیزی سے بگڑتی ہوئی صورت حال خطے میں بہت سی تبدیلیوں کی نقیب ثابت ہوسکتی ہے۔ شام کی تقسیم کا امکان تو خیر نہیں ہے مگر اِس بحران کے بطن سے کئی خرابیاں نکل [مزید پڑھیے]

ترکی اور عرب دنیا

January 16, 2012 // 0 Comments

سعودی شہزادے عبدالعزیز بن طلال بن عبدالعزیز السعود نے سعودی عرب کے شراکت دار اور مشرق وسطیٰ کے استحکام میں اہم کردار ادا کرنے کے حوالے سے ترکی کو سراہاہے۔ ان کا کہنا ہے کہ یہ کردار اگرچہ نیا ہے تاہم اس کی اہمیت سے انکار نہیں کیا جاسکتا۔ شہزادہ عبدالعزیز بن طلال کہتے ہیں کہ ’’پانچ دس سال پہلے تک یہ معاملہ نہیں تھا۔ خطے کی سلامتی اور استحکام میں ترکی کا واضح کردار نہیں تھا اور ہر معاملے میں اس کی طرف دیکھنے کا رجحان بھی عام نہیں ہوا تھا‘‘۔ سعودی شہزادے نے ان خیالات کا اظہار انقرہ کے تھنک ٹینک سینٹر فار مڈل ایسٹرن اسٹریٹجک اسٹڈیز کی دعوت پر ترکی کے دورے کے دوران ٹوڈیز زمان سے ایک انٹرویو میں کیا۔ انہوں [مزید پڑھیے]

شام کی فوج میں دراڑیں

November 16, 2011 // 0 Comments

شام کی فوج میں بھی اختلافات بڑھتے جارہے ہیں۔ فورسز چھوڑ کر عوام سے جا ملنے والے سپاہیوں کی تعداد بڑھتی جارہی ہے۔ بشارالاسد انتظامیہ نے اب تک اقتدار کے لیے فوج، پولیس اور خفیہ اداروں پر انحصار کیا ہے۔ یہ تینوں اب تک وفادار رہے ہیں مگر اب ان میں بھی منحرفین کی تعداد بڑھتی جارہی ہے اور منحرف ہونے والے بہتر انداز سے منظم بھی ہو رہے ہیں۔ مارچ میں حکومت کے خلاف تحریک شروع ہوئی تھی۔ تب سے اب تک فوج سے لوگ منحرف ہوتے رہے ہیں۔ ان میں بڑی تعداد سنیوں کی ہے۔ بہت سے منحرف فوجی ملک چھوڑ گئے، کچھ نے عوام میں پناہ لی ہے۔ جولائی میں کرنل ریاض الاسد نے ترکی میں پناہ لی اور فری سیرین آرمی [مزید پڑھیے]