Abd Add
 

فلسطینیوں

صرف اقدامات ہی موثر ہیں!

June 16, 2005 // 0 Comments

اسرائیلی وزیراعظم ایریل شیرون کی ٹائم کے یروشلم بیورو چیف Matt Rees اور ورلڈ ایڈیٹر Romesh Ratnesar سے ملاقات ہوئی۔ اسرائیلی پارلیمنٹ میں انخلاء کے منصوبے کی منظوری کے بعد شیرون کا کسی میگزین کے ساتھ پہلا انٹرویو ہے‘ جس کا اقتباس درج ذیل ہے: ٹائم: یہ بہت ہی خوبصورت گھر ہے۔ شیرون: میری رہائش کا یہاں پانچواں سال ہے۔ ٹائم: ابھی کتنے سال اور آپ یہاں رہیں گے؟ شیرون: مجھے جلدی نہیں ہے۔ میں اس جگہ کو چھوڑنے کا ارادہ نہیں کر رہا ہوں۔ ٹائم: اگر آپ ماضی کے اس مقام پر جا کر سوچیں جبکہ آپ ایک نوجوان فوجی افسر تھے تو ۲۰۰۵ء کا اسرائیل آپ کے خیال میں کس طرح کا ہونا چاہیے؟ شیرون: میں نے اس وقت یہی سوچا تھا کہ [مزید پڑھیے]

ہندوستان اور صیہونی حکومت کا بڑھتا ہوا تعاون

June 1, 2005 // 0 Comments

ہندوستان کی مخلوط حکومت میں شامل بائیں بازو کی جماعتوں اور رائے عامہ کی طرف سے صیہونی حکومت کے ساتھ تعاون کو فروغ دینے کی مخالفت کے باوجود صیہونی حکومت نے ہندوستان کے ساتھ ایک معاہدے پر دستخط کیے ہیں کہ جس کے تحت وہ ہندوستان کی ریاست بہار میں گولہ بارود بنانے کے پانچ کارخانے قائم کرے گی۔ ہندوستان کی ’’نیکو‘‘ کمپنی نے ہندوستانی وزارتِ دفاع سے لائسنس حاصل کرنے کے بعد صیہونی حکومت کی پیٹ مین انجینئرنگ کمپنی سے یہ معاہدہ کیا ہے۔ اس معاہدے کی مالیت ایک سو چالیس ملین ڈالر ہے۔ کہا جارہا ہے کہ یہ کارخانے ویسے ہی ہوں گے جیسے صیہونی حکومت کی فوجی صنعتوں کے کارخانے ہیں‘ جو اسرائیلی فوج کی ضروریات اور برآمدات کو پورا کرتے ہیں۔ [مزید پڑھیے]