Abd Add
 

فرانس

فرانس: اسلام دشمنی واشگاف

October 16, 2020 // 0 Comments

فرانسیسی صدر ایمانوئل میکرون نے دی میوروکس، پیرس کے مقام پر خطاب کرتے ہوئے کہا ہے کہ فرانس کی سیکولر اقدار کو ’’اسلامی بنیاد پرستی‘‘ سے محفوظ رکھنا ناگزیر ہوگیا ہے، پوری دنیا کے مذاہب کو مسلمان شدت پسندوں سے سخت خطرہ درپیش ہے۔ فرانسیسی صدر نے زور دیتے ہوئے کہاکہ اب اسلامی بنیاد پرستوں سے کسی بھی قسم کی رعایت نہیں برتی جائے گی۔ فرانس کے تعلیمی اداروں اور عوامی مراکز سے مذہب کو باہر کردیا جائے گا۔ میکرون کا کہنا تھاکہ صرف فرانس ہی نہیں بلکہ پوری دنیا کی مشکلات کا ذمہ دار اسلام ہے۔ میکرون نے اعلان کیا کہ اس حوالے سے حکومت دسمبر میں ایک قرارداد پیش کرے گی، جس سے ۱۹۰۵ء سے موجود سیکولر ریاست کے قانون کو مزید تقویت [مزید پڑھیے]

’ کباب فوبیا ‘۔۔ فرانس میں نیا سیاسی ہتھیار!

January 1, 2015 // 1 Comment

فرانس میں سیاسی میدان میں دائیں بازو کے متعصب سیاست دانوں اور لبرل حلقوں کے درمیان ملکی سیاست کے حوالے سے دیگر متضاد آرا کے ساتھ مشرقی کھانوں بالخصوص ’’کباب‘‘ کی بڑھتی مقبولیت پر بھی سخت اختلافات ہیں اور کباب سیاسی محاذ کو گرم کرنے کا موجب بنا ہوا ہے۔

فرانسیسی زبان اور فرانس کے معاشی مفادات

September 1, 2014 // 0 Comments

جیکوس اٹالی نے اپنی رپورٹ رواں ماہ فرانس کے صدر کو پیش کردی ہے، جس کے پیش لفظ میں انہوں نے اس خدشے کا اظہار کیا ہے کہ اگر فرانسیسی زبان کے تحفظ کے لیے بروقت اقدامات نہ کیے گئے تو دنیا بھر میں فرانسیسی بولنے والے افراد کی تعداد میں آئندہ چند عشروں کے دوران میں نمایاں کمی آسکتی ہے۔

ڈاکٹر محمد یونس اور گرامِن بنک کا ایشو

April 16, 2011 // 0 Comments

بنگلہ دیش میں ڈاکٹر محمد یونس کا ایشو ایک دفعہ پھر زور پکڑ گیا۔ ۵؍اپریل کو جب بنگلہ دیش سپریم کورٹ کے سات رکنی فل بنچ نے چیف جسٹس اے بی ایم خیرالحق کی سربراہی میں ڈاکٹر محمد یونس کی درخواست مسترد کر دی تو اس فیصلے پر بنگلہ دیش کے اندر اور باہر سخت ردعمل سامنے آیا۔ اٹارنی جنرل محبوب عالم نے سپریم کورٹ کے فیصلے کے فوراً بعد کہا کہ اب ڈاکٹر محمد یونس کا اپنے آفس میں بیٹھنا سراسر غیر قانونی ہوگا۔ ۲مارچ کو بنگلہ دیش بنک (اسٹیٹ بنک) نے ڈاکٹر محمد یونس کو گرامِن بنک کے منیجنگ ڈائریکٹر کے عہدے سے برطرف کر دیا تھا۔ دوسرے دن ڈاکٹر محمد یونس نے ہائی کورٹ میں اس کے خلاف پٹیشن دائر کردی۔ جس [مزید پڑھیے]

حجاب پر پابندی فرانس کو مہنگی پڑے گی!

September 16, 2010 // 0 Comments

فرانس اور بیلجیم نے اسلامی حجاب پر پابندی عائد کرنے کا فیصلہ تو کرلیا تاہم اب انہیں اس کا خمیازہ بھی بھگتنا پڑ رہا ہے۔ فرانسیسی حکومت اور پارلیمنٹ نے حجاب پر پابندی کے معاملے کو بہت حد تک انا کا مسئلہ بنالیا جس کے باعث موقف ترک کرنا اس کے لیے شدید مشکلات پیدا کرسکتا ہے۔ فرانس کی سینیٹ ماہ رواں کے دوران حجاب پر مکمل پابندی کے حق میں ووٹ دینے والی ہے۔ قومی اسمبلی اس بل کو پہلے ہی منظور کرچکی ہے۔ سینیٹ سے منظوری کے بعد اس بل کو قانون کی شکل میں نافذ کرنا ہوگا۔ فرانس کی سیاحت کی صنعت کے لیے یہ موت کا پیغام ہوسکتا ہے۔ جب سے فرانس میں پردے پر پابندی کا معاملہ چلا ہے تب [مزید پڑھیے]

1 2