بھارت

نریندر مودی اور زی جن پنگ کا دورۂ امریکا

November 1, 2015 // 0 Comments

بھارت کے وزیراعظم نریندر مودی خود کو یہ باور کراچکے ہیں کہ ’’جو کچھ زی جِن پِنگ کرسکتے ہیں، وہ سب مَیں اُن سے بہتر کر سکتا ہوں‘‘۔ اور اسی یقین کے زیرِ اثر وہ بھی چینی صدر کے پیچھے پیچھے رواں برس ستمبر میں امریکا جا پہنچے۔ دونوں رہنماؤں نے اپنے دورۂ امریکا کا آغاز مغربی ساحلی ریاستوں سے کیا، جہاں وہ صفِ اول کی امریکی ٹیکنالوجی کمپنیوں کی توجہ حاصل کرنے کی کوششوں میں مصروف رہے۔ دونوں رہنماؤں نے اقوام متحدہ کے مختلف اجلاسوں سے خطاب کیے اور امریکا کے صدر براک اوباما سے ملاقاتیں کی۔ لیکن دونوں رہنماؤں کے اس دورے کی خاص بات یہ تھی کہ دونوں نے اپنے ان دوروں کو اپنے اور امریکا، دونوں ملکوں کے عوام کے درمیان [مزید پڑھیے]

بھارت میں شادی کے بدلتے تیور

November 1, 2015 // 1 Comment

وقت گزرنے کے ساتھ ساتھ بھارت میں بہت کچھ تبدیل ہو رہا ہے۔ ایک طرف تو ٹیکنالوجی کے شعبے میں زیادہ سے زیادہ مہارت آتی جارہی ہے اور دوسری طرف مالی حیثیت بھی بہتر ہوتی جارہی ہے۔ ممبئی اور دوسرے بڑے شہروں میں اب معاملات یوں بدلے ہیں کہ ذات پات کا فرق بھی مٹتا جارہا ہے اور آپس میں شادیاں عام ہوچلی ہیں۔ حقیقت یہ ہے کہ معاملات ذات پات کا فرق مٹنے تک محدود نہیں رہے۔ اب مختلف مذاہب سے تعلق رکھنے والوں میں بھی شادی عام ہوتی جارہی ہے۔ فلموں اور ڈراموں میں جو کچھ دکھایا جاتا رہا ہے وہ اب کہیں کہیں دکھائی دیتا ہے یعنی یہ کہ ماں باپ نے شادی طے کردی یا ذات کے فرق پر ہنگامہ کھڑا [مزید پڑھیے]

شمال مشرقی بھارت کے باغیوں کا اتحاد

July 1, 2015 // 0 Comments

شمالی ہند کے باغی گروپوں نے ۱۷؍اپریل کو ایک متحدہ مورچہ تشکیل دیا ہے، جس کے بعد سے مرکزی حکومت کی مشکلات میں اضافہ ہوگیا ہے۔ اس مورچے کی تشکیل کا بنیادی مقصد مرکزی اور ریاستی حکومتوں کے لیے مشکلات بڑھانا ہے تاکہ اپنے مطالبات زیادہ طاقتور انداز سے منوائے جاسکیں۔ ناگا لینڈ اور میانمار کی سرحد پر ایک گشت کے دوران باغیوں سے جھڑپ میں بھارتی نیم فوجی دستوں کے آٹھ جوان مارے گئے۔ مقامی لوگوں نے بتایا کہ باغیوں نے بڑی تعداد میں علاقے کا محاصرہ کرکے سکیورٹی فورسز کو نشانہ بنایا۔ یہ سب کچھ اتنے بڑے پیمانے پر تھا کہ مقامی باشندے شدید خوفزدہ ہوگئے۔ باغیوں کے پاس جدید اور وافر اسلحہ تھا۔ سکیورٹی فورسز کے اہلکاروں کو گمان بھی نہ تھا [مزید پڑھیے]

بھارت کے ماتھے پر داغ

April 1, 2015 // 0 Comments

ترقی کے جدید ترین معیارات کو اپنانے کے باوجود بھارت اب تک بہت سی ایسی پریشانیوں سے نجات نہیں پاسکا ہے جو اُس کے ماتھے پر داغ کے مانند ہیں۔ سماجی برائیوں کا ایک دائرہ ایسا ہے جس سے باہر آنا بھارت کے لیے انتہائی دشوار ثابت ہو رہا ہے۔ گزشتہ دنوں پارلیمان میں ایک رکن نے بھارت میں خاتون سے زیادتی کے واقعے سے متعلق بیرون ملک بنائی جانے والی دستاویزی فلم پر تبصرہ کرتے ہوئے اِسے بھارت کے خلاف سازش قرار دیا۔ مرکزی وزیر داخلہ راج ناتھ سنگھ نے پارلیمان میں بیان دیا کہ وہ برطانوی نشریاتی ادارے ’’بی بی سی‘‘ کو حکم دیں گے کہ وہ اِس فلم کو ٹیلی کاسٹ کرنے سے باز رہے۔ حزب اختلاف کے غیر معمولی دباؤ پر [مزید پڑھیے]

1 2 3 4