Abd Add
 

ایران کا جوہری پروگرام

ایٹمی پروگرام، ایران کو کیسے روکیں؟

July 1, 2019 // 0 Comments

قریباً چار سال سے ایران کی جانب سے ایٹمی اسلحہ تیار کرنے کی سرگرمیاں روک دی گئی ہیں۔ ایران نے امریکا اور دیگر طاقتوں سے۲۰۱۵ء میں ایک معاہدہ کیا تھا، جس کے تحت اس کے ایٹمی پروگرام کوپُرامن یا غیر عسکری مقاصد (civilian uses) جیسے پیداوارِ توانائی (power-generation) کے حصول تک محدود کردیاگیا تھا۔ ایران میں نیوکلیائی سرگرمیوں کا پتا چلانے کے لیے جو اقدامات کیے گئے، اس حوالے سے ایران کو معائنے کے لیے سخت ترین حکومت (toughest inspection regime) کہا گیا۔ ماہرین اس بات پر متفق ہیں کہ ایران معاہدے کی تعمیل کررہا ہے اور اس کی نیوکلیائی سرگرمیاں محدود ہیں۔لیکن صدر ڈونلڈ ٹرمپ نے اس نیوکلیائی معاہدے کو ختم کردیا، جس کی وجہ سے ایران نے یورینیم کی افزودگی پھر سے شروع [مزید پڑھیے]

امریکی کانگریس میں نیتن یاہو کے خدشات

March 16, 2015 // 0 Comments

تین مارچ کو امریکی کانگریس میں بن یامین نیتن یاہو کی قیامت خیز تقریر زیادہ مدد گار ثابت نہیں ہوئی۔ تقریر کا مقصد امریکا کو یہ سمجھانا تھا کہ آخر وہ ایران کے ساتھ ایک ایسی نیوکلیائی ڈیل کیسے کرے، جو ایران کو ایٹم بم بنانے سے روک سکے۔ اسرائیلی وزیراعظم کی تقریر کے دوران ری پبلکن بار بار کھڑے ہو کر داد دیتے رہے، جبکہ ڈیموکریٹس کی جانب سے ملا جلا ردِ عمل آیا۔ اپنی تقریر میں اسرائیلی وزیراعظم اس بات کی وضاحت کرتے رہے کہ امریکی حکومت اور دیگر عالمی قوتوں کا جو معاہدہ ایران کے ساتھ طے پانے جا رہا ہے، وہ اتنا ناقص ہے کہ وہ ایران کے لیے ایٹم بم بنانے کی راہ مسدود کرنے کے بجائے ہموار کرتا ہے۔ [مزید پڑھیے]