Abd Add
 

عراق جنگ

’’عراق مشن‘‘ ختم ہوا؟

September 16, 2010 // 0 Comments

ڈیموکریٹک پارٹی نے عراق جنگ کی مخالفت کے ذریعے امریکی ووٹروں کی توجہ حاصل کی تھی۔ بارک اوباما کو اندازہ تھا کہ عراق جنگ نے امریکیوں کو نفسیاتی خلجان میں مبتلا کر رکھا ہے اور ایسے میں اس جنگ کی شدید مخالفت کرکے ہی ان کا اعتماد حاصل کیا جاسکتا ہے۔ یہی سبب ہے کہ انہوں نے انتخابی مہم کے دوران عراق جنگ کے خلاف بڑھ چڑھ کر خیالات کا اظہار کیا۔ انہوں نے ووٹروں کو یاد دلایا کہ وہ ابتدا ہی سے اس جنگ کے خلاف تھے۔ دوسری جانب ڈیموکریٹک پارٹی کی جانب سے صدارت کے منصب کے لیے امیدواری کی امیدوار (اور موجودہ وزیر خارجہ) ہلیری کلنٹن نے عراق جنگ کی مخالفت میں کچھ زیادہ بولنے سے گریز کیا جس کا خمیازہ بھی [مزید پڑھیے]

امریکی صدر کا ’’افپاک‘‘ پالیسی خطاب

December 16, 2009 // 0 Comments

میں نے ایک ہدف مقرر کیا جس کی محدود وضاحت ان الفاظ میں میں کی گئی تھی کہ ہمارا مقصد القاعدہ اور اس کے انتہا پسند اتحادیوں کو درہم برہم کرنا، اسے منتشر کرنا اور شکست دینا ہے۔ میں نے امریکا کی فوجی اور سویلین کارروائیوں کو بہتر طریقے سے مربوط کرنے کا عہد کیا۔ اس کے بعد سے اب تک، ہم نے بعض اہم مقاصد کے حصول میں پیش رفت کی ہے۔ القاعدہ اور طالبان کے اعلیٰ سطح کے لیڈر ہلاک کر دیے گئے ہیں اور ہم نے ساری دنیا میں القاعدہ پر دبائو بڑھا دیا ہے۔ پاکستان میں، اس ملک کی فوج نے، برسوں کے بعد اتنی بڑی کارروائی کی ہے۔ افغانستان میں ہم نے اور ہمارے اتحادیوں نے طالبان کی صدارتی انتخاب [مزید پڑھیے]

مختصر مختصر 2007

February 1, 2007 // 0 Comments

اقوام متحدہ کی جانب سے انفرادی اموات کی گنتی کے مطابق گذشتہ سال ۳۴۴۵۲ عراقی ہلاک کیے گئے۔

عراق جنگ

January 1, 2007 // 0 Comments

موجودہ جنگ کے نتیجے میں عراق میں ۶ لاکھ ۵۵ ہزار شہریوں کی ہلاکت کا اندازہ لگایا گیا ہے۔ یہ تعداد ایک متنازعہ سروے کے نتیجے میں سامنے آئی ہے

ایران امریکا کا دشمن نمبر ایک

March 1, 2006 // 0 Comments

لندن: ۲۵ جنوری‘ ایسوسی ایٹڈ پریس کی رپورٹ کے مطابق ایک گیلپ پول کے نتیجے میں ایران امریکا کا دشمن نمبر ایک جبکہ کینیڈا اور برطانیہ قریب ترین دوست قرار پائے ہیں۔ فرانس اور جرمنی سے متعلق مثبت رائے رکھنے والے امریکیوں کی تعداد میں ۲۰۰۳ء کے مقابلے میں اضافہ ہوا ہے۔ فروری ۶ تا ۹ ہونے والے پول میں جس میں ۱۰۰۲ امریکیوں کی رائے لی گئی تھی‘ ۳۱ فیصد نے ایران کو اپنا بدترین دشمن ہونے کی ہامی بھری ہے۔ جبکہ گذشتہ سال ایسی رائے کی شرح صرف ۱۴ فیصد تھی۔ ایک سال پہلے عراق کے متعلق ایسا خیال رکھنے والوں کی تعداد ۲۲ فیصد تھی جو ابھی بھی وہی ہے‘ اس کے باوجود کہ عراق میں قائم حکومت امریکی حمایت سے ہے۔ [مزید پڑھیے]

ایران کے خلاف سازشیں

February 1, 2006 // 0 Comments

خلیجِ فارس میں عراق کے خلاف جنگ کرنے اور اس نہتّے ملک کے نہتّے عوام کو نشانہ بنانے اور وہاں تباہی مچانے کے بعد اَب امریکا اور اُس کے حواری ممالک ایران کو نشانہ بنانے کی مہم شروع کیے ہوئے ہیں۔ ایران پر الزام عائد کیا جارہا ہے کہ وہ نیوکلیئر ہتھیار تیار کرنے کے عمل میں مصروف ہے اور امریکا اور اُس کے دوسرے حواری ممالک نہیں چاہتے کہ اسلامی ملک کی شناخت کے ساتھ ایران ایک نیوکلیئر طاقت بن جائے۔ ایران اس الزام کی مسلسل تردید کرتا رہا ہے کہ وہ نیوکلیئر ہتھیار تیار کر رہا ہے۔ ایران کا استدلال ہے کہ وہ اپنا نیوکلیئر پروگرام پُرامن مقاصد کے لیے جاری رکھنا چاہتا ہے اور وہ نیوکلیئر سرگرمیاں توانائی کے شعبہ میں فروغ [مزید پڑھیے]

1 2