Abd Add
 

جموں و کشمیر

بھارتی عدلیہ کا شرمناک روپ

October 1, 2019 // 0 Comments

بھارت کے جج کشمیر میں حکومتی زیادتیوں کو نظر انداز کر رہے ہیں۔ اگر انہوں نے فیصلوں کو غیر معمولی تاخیر سے دوچار رکھا تو کسی بھی پیچیدہ یا متنازع معاملے پر رولنگ دینے کی پوزیشن میں نہیں رہیں گے۔ دو ماہ قبل بھارت کے وزیر اعظم نریندر مودی نے بہت ہی دیدہ دلیری سے سات عشروں سے برقرار قانونی نظیر ختم کرتے ہوئے جموں و کشمیر کو خصوصی حیثیت سے محروم کردیا یعنی اس کی نیم خود مختار حیثیت ختم کردی۔ حکومت نے جموں و کشمیر کی قانون ساز اسمبلی کو ختم کرکے پورے خطے کو دو حصوں میں تقسیم کردیا اور دونوں کو یونین ٹیریٹری یعنی مرکز کا علاقہ قرار دے دیا۔ اب جموں و کشمیر پر نئی دہلی کی قومی یا مرکزی [مزید پڑھیے]

کشمیر: ’خالی میدان میں الیکشن کی ڈفلی‘

September 16, 2018 // 0 Comments

جنوبی کشمیر کے حساس ترین ضلع شوپیاں آرش گنا پورہ گاؤں کی ایک چھوٹی سی پہاڑی پر پاکستانی جھنڈا لہرا رہا ہے۔ پہاڑی کے دامن میں گاؤں کا پنچایت گھر ہے، جو دو سال سے مقفل ہے۔ پنچایت گھر کے سنگِ بنیاد پر سبز اور سفید رنگ سے پاکستانی جھنڈا پینٹ کیا گیا ہے۔ ۲۰۱۶ء تک ولی محمد اسی پنچایت کے سرپنچ رہے ہیں۔ جموں وکشمیر کی آٹھ ہزار پنچایتوں کے لیے انتخابات طویل مدت کے بعد ۲۰۱۱ء میں ہوئے تھے۔ ان پنچایتوں کی مدتِ کار کا خاتمہ ۲۰۱۶ء میں عین اُسی وقت ہوا، جب مقبول مسلح کمانڈر برہان وانی کی ہلاکت نے کشمیر میں ہندمخالف احتجاجی لہر بھڑکا دی۔ ولی محمد کہتے ہیں حکومت انتخابات کا اعلان تو کر رہی ہے، لیکن انتخابات میں [مزید پڑھیے]

1 2