Abd Add
 

امریکی ڈرون حملے

کسی بھی قیمت پر!

October 16, 2011 // 0 Comments

پاک آرمی کی گیارہویں کور (پشاور) کے کمانڈر لیفٹیننٹ جنرل آصف یاسین ملک سے ’’نیوز ویک‘‘ کے نذر الاسلام نے راولپنڈی میں انٹرویو کیا جو ہم آپ کی خدمت میں پیش کر رہے ہیں۔ ٭ ریاست ہائے متحدہ امریکا کی سربراہی میں لڑی جانے والی دہشت گردی کے خلاف جنگ میں پاکستانی فوج کا کیا کردار ہے؟ آصف یاسین ملک: پاکستانی فوج اور نیم فوجی ادارے دہشت گردی کے خلاف طویل مدت سے لڑ رہے ہیں۔ یہ لڑائی ۱۱ ستمبر ۲۰۱۱ء سے بھی پہلے سے جاری ہے۔ نائن الیون کے بعد تو ہمیں بس حالات کے مطابق خود کو بدلنا تھا۔ پہلے ہم جنگ کے روایتی طریقوں کو اپنائے ہوئے تھے۔ اب ہم کہیں بھی قانون نافذ کرنے سے متعلق کارروائی کی اہلیت رکھتے ہیں۔ [مزید پڑھیے]

سی آئی اے کے سینے میں خنجر

January 16, 2010 // 0 Comments

مشرقی افغانستان میں پاک افغان سرحد کے نزدیک امریکی فوجی اڈے پر سی آئی اے کے ۷ ؍افسران کو ہلاک کرنے والا خود کش حملہ آور پاکستان سے گیا تھا۔ قریبی ذرائع کا کہنا ہے کہ وہ سی آئی اے کا باقاعدہ مخبر تھا اور کئی بار اس فوجی اڈے پر آچکا تھا۔ فوجی اڈے کے سکیورٹی ڈائریکٹر کے قریبی ذرائع نے بھی اس بات کی تصدیق کی ہے کہ وہ اس فوجی اڈے کے بیشتر افسران اور دیگر اہلکاروں کے لیے چنداں اجنبی نہ تھا۔۔۔ امریکا کے مرکزی خفیہ ادارے کو غیر معمولی نقصان سے دوچار کرنے والا حملہ آور پاکستانی تھا۔ اس کا تعلق شمالی وزیرستان کے وزیر قبائل سے تھا۔ فوجی اڈے کا سکیورٹی ڈائریکٹر ارغوان افغان باشندہ تھا اور وہ اسے [مزید پڑھیے]