Abd Add
 

اقوام متحدہ

25 اپریل 1945 ء سے 26 جون 1945 ء تک سان فرانسسکو، امریکہ میں پچاس ملکوں کے نمائندوں کی ایک کانفرس منعقد ہوئی۔ اس کانفرس میں ایک بین الاقوامی ادارے کے قیام پر غور کیا گیا۔ چنانچہ اقوام متحدہ یا United Nations کا منشور یا چارٹر مرتب کیا گیا۔ لیکن اقوام متحدہ 24 اکتوبر 1945 ء میں معرض وجود میں آئی۔

’’ امریکی سامراجی! گھر جاؤ! ‘‘

October 1, 2006 // 0 Comments

ہم اور یہ اسمبلی فقط اظہارِ خیال تک محدود ہو گئی ہے۔ ہمارے پاس کوئی اختیار نہیں۔ ہمارے پاس دنیا کی خوفناک صورتحال پر اثرانداز ہونے کا کوئی اختیار نہیں‘ اسی لیے وینزویلا آج ۲۰ ستمبر کو ایک بار پھر تجویز پیش کرتا ہے کہ اقوامِ متحدہ کی تنظیمِ نو کی جائے۔

انٹرنیٹ کے عالمی کنٹرول پر تنازع

November 16, 2005 // 0 Comments

انٹرنیٹ کے کنٹرول کے معاملے کو لے کر امریکا کا دنیا کے کئی دیگر ملکوں کے ساتھ تنازعہ چل رہا ہے۔ چین‘ برازیل اور ایران جیسے ممالک اس بات کے حق میں نہیں ہیں کہ دنیا کا سپر پاور عالمی کمپیوٹر نیٹ ورک کے نظام کا واحد نگراں ہو اور دُنیا بھر کے کمپیوٹر ٹریفک کو کنٹرول کرے۔ ان ممالک کی تجویز ہے کہ یہ کردار ایک بین الاقوامی ادارہ کو دیا جانا چاہئے جو خاص اس مقصد سے قائم کیا گیا ہو۔ امریکا کا اس تجویز پر اعتراض یہ ہے کہ اس طرح کا کوئی ادارہ کمپیوٹر کی دنیا میں روز بروز نت نئی پیش رفت کی رفتار کو سست کردینے کا موجب بنے گا۔ کمپیوٹر کی دنیا کے کاروباریوں کو کسی بھی نئے [مزید پڑھیے]

صاف پانی میسر نہیں!

August 1, 2005 // 0 Comments

صاف پانی میسر نہیں! ٭ وسیع و عریض قومی بجٹ میں سے صرف ۴۱۲۸ ملین روپے صحت کے لیے مختص ہوئے۔ ٭ ماہرین کا کہنا ہے کہ یہ رقم کل GDP کا صرف ۳۷۵ء۰ فیصد ہے۔ ٭ گذشتہ بجٹ میں یہ رقم GDP کا ۸۴ء۰ تھی۔ ٭ ۲۰۰۴ء کے اقتصادی سروے کے مطابق: ۱۰۷,۲۵ افراد کے لیے صرف ایک ڈاکٹر۔ ۱۲۷,۶ ڈینٹسٹ۔ ۴۴۶,۴۸ تربیت یافتہ نرسیں۔ ملک بھر میں ۹۱۶ سرکاری اسپتال۔ ۵۴۴ دیہی صحت کے مراکز۔ ۵۳۰ بنیادی صحت کے یونٹ۔ ۵۸۲,۴ ڈسپنسریاں۔ ٭ اقوامِ متحدہ کے ترقیاتی پروگرام U.N.D.P. کی سالانہ رپورٹ کے مطابق: پاکستان‘ علاقے کے دوسرے ممالک کے مقابلے میں سب سے پیچھے ہے۔ پاکستان میں اوسط عمر تقریباً ۶۱ سال جبکہ بھارت میں ۹ء۶۳ اور بنگلہ دیش میں ۶ء۶۱ سال [مزید پڑھیے]

1 2 3