Abd Add
 

Articles by فیچر معارف

صلیبی دہشت کا ایک خوفناک دن

September 1, 2006 // 0 Comments

اگست کی یہ تاریخ ہر سال یہی منظر پیش کر رہی ہے اور قیامت تک پیش کرتی رہے گی۔ آپ شاید محسوس نہ کرتے ہوں گے لیکن آیئے مختصراً اس داستان کو سن لیجیے۔ ممکن ہے کہ اس کے بعد میری طرح اس تاریخ کا یہ سوگوار منظر آپ کے دل میں بھی ہمیشہ کے لیے منقوش ہو جائے۔

امریکا اور اسرائیل تنہا کھڑے ہیں!

September 1, 2006 // 0 Comments

میں اپنی زندگی میں بہت ہی خوش قسمت رہا ہوں۔ جو کچھ میں نے کیا‘ اس کے نتیجے میں مجھے اور میری بیوی کو بے شمار مسرت و شادمانی میسر آئی۔ میں چار سال وائٹ ہاؤس میں رہا‘ یہ میری ناکامی نہیں تھی۔ کسی کے لیے امریکا کے صدر کی حیثیت سے کام کرنا کوئی سیاسی ناکامی تو نہیں۔ جب میں نے کاخِ سفید چھوڑا تو ہم نے اپنی زندگی کے بہترین دن گزارے۔

وندے ماترم تنازعہ

September 1, 2006 // 0 Comments

وندے ماترم ایک بنگالی شاعر و ادیب بنکم چندر چٹرجی کی ۱۸۷۶ء میں لکھی نظم ہے۔ نظم میں ملک کو ایک دیوی خیال کرتے ہوئے جہاں اس کی تعریف و توصیف بیان کی گئی ہے‘ وہیں اس کی پرستش کرتے ہوئے اسے ’درگا‘ اور ’کالی‘ قرا ردیا گیا ہے اور دشمن کو نیست و نابود کرنے کے عزائم بھی ظاہر کر دیے گئے ہیں۔

امریکا میں پاکستانی طلبہ کی تعداد میں اضافہ!

September 1, 2006 // 0 Comments

سنجیدہ طلبہ جنہوں نے امریکی یونیورسٹی کے انتخاب کے حوالے سے ہوم ورک انجام دیا ہے اور جنہوں نے ویزہ کی درخواست گزاری کے ضوابط کی اچھی طرح پابندی کی ہے‘ وہ ہمارے سفارت خانہ کی ویب سائٹ پر جاسکتے ہیں اور انہیں بجا طور سے ویزہ ملنے کی توقع کرنی چاہیے۔ امریکا میں پاکستانیوں کے حصولِ تعلیم کی حوصلہ افزائی کے لیے ہماری دونوں حکومتوں نے حال ہی میں Pakistan-US Student Fullbright Program میں اضافہ کر دیا ہے۔

’’بائبل: ابتداء سے انتہا تک‘‘

January 16, 2006 // 0 Comments

مذاہب ہر دور اور ہر قوم کے لوگوں میں دلچسپی کا موضوع رہا ہے۔ تاہم آج جب تقابل ادیان کی ہر طرف بات کی جارہی تو اس کی اہمیت بہت بڑھ گئی ہے۔ مذہب سے آگاہی اور اس کے پس منظر و پیش منظر سے واقفیت حاصل کرنا تحریر و تحقیق سے دلچسپی رکھنے والے طالب علموں کے لیے اہمیت کا حامل رہاہے۔ کیونکہ دین نے جب بھی مذہب کی شکل اختیار کی تو انسان بنیاد سے ہٹ گیا اور اختلافات و تنازعات کو جنم دیا۔ ان ہی خیالات کے پیش نظر سہیل جمیل نے بائبل پر تحقیق کا آغاز کیا اور بالآخر اپنی کوششوں کے بعد اسے تکمیل تک پہنچایا۔ اپنی اس تحقیق کو انہوں نے ’’بائبل: ابتداء سے انتہا تک‘‘ کے نام سے [مزید پڑھیے]

اسلامی جمہوریہ موریطانیہ

January 16, 2006 // 0 Comments

فرانس سے آزادی کے ۱۲ برس تک یعنی ۱۹۶۰ء اور ۱۹۷۲ء کے درمیان اسلاک ری پبلک آف موریطانیہ سیاسی اِستحکام اور اِقتصادی آزادی حاصل کرنے کی جدوجہد کرتا رہا۔ اس ملک کو اِس دوران نہ صرف خشک سالی کا سامنا ہوا بلکہ ۱۹۷۰ء کی پوری دہائی میں اقتصادی پریشانیوں کا سامنا بھی کرنا پڑا۔ اس کے بعد ۱۹۷۲ء اور ۱۹۸۷ء کے درمیان خشک سالی اور مغربی صحارا میں جنگ کے ماحول نے اسے متاثر رکھا۔ پورا ملک قرض میں پھنسا ہوا ہے اسے عرب ممالک اور فرانس کی امداد کے سہارے آگے بڑھنا پڑ رہا ہے۔ ابتدائی صدی میں فرانسیسی کالونی کے طور پر استعمال ہونے والا یہ ملک شمالی افریقہ اور مغربی افریقہ کے درمیان رابطہ کا کام کرتا رہا ہے۔
[مزید پڑھیے]

ظلمت سے نور کی جانب

January 16, 2006 // 0 Comments

جرمین لجوانے جیکسن (Jermaine Lajuane Jackson) گیارہ دسمبر ۱۹۵۴ء کو امریکا کی ریاست انڈیانا کے شہر گرے میں پیدا ہوئے۔ ان کا تعلق افریقی امریکی گھرانے سے ہے۔ ان کی ماں کا نام کیتھرائن جیکسن اور باپ کا نام جوزف تھا۔ جرمین جیکسن معروف پاپ سنگرز مائیکل جیکسن اور جینٹ جیکسن کے بھائی ہیں۔ موسیقی کی دنیا میں ان کا نام بھی اپنے بھائی اور بہن کی طرح عالم گیر شہرت رکھتا ہے۔ مائیکل جیکسن اور جینٹ جیکسن اب بھی ناچ گانے کے شیطانی دھندے سے وابستہ ہیں جبکہ جرمین جیکسن ‘ یوسف اسلام (کیٹ اسٹون) کی طرح اپنے عروج کے زمانے میں ہی پاپ کی دنیا چھوڑ چکے ہیں۔ جرمین جیکسن کا قبول اسلام ہادی عالم رسول اکرم صلی اللہ علیہ وسلم کے اس [مزید پڑھیے]

1 164 165 166 167 168